Advertisement

منی لانڈرنگ کیس: ایف آئی اے نے شہباز شریف اور حمزہ شہباز کی گرفتاری مانگ لی

وزیراعظم شہباز شریف اور حمزہ شہباز سمیت دیگر کے خلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت سپیشل کورٹ سینٹرل لاہور میں ہوئی۔ سنیچر کے روز ہونے والی سماعت میں وزیراعظم شہباز شریف اور وزیراعلٰی پنجاب حمزہ شہباز سپیشل کورٹ سینٹرل میں پیش ہوئے۔ ایف آئی اے کی جانب  سے ضمنی چالان عدالت میں جمع کرا دیا گیا۔ ایف آئی اے کے سپیشل پراسیکیوٹر فاروق باجوہ نے ضمنی چالان جمع کرایا۔

سپیشل کورٹ سینٹرل کے جج اعجاز اعوان نے ایف آئی اے سے استفسار کیا کہ ‘کیا آپ کو شہباز شریف اور حمزہ شہباز کی گرفتاری مطلوب ہے؟‘ اس پر ایف آئی اے کے وکیل نے جواب دیا کہ ’شہباز شریف اور حمزہ شہباز دونوں کی گرفتاری مطلوب ہے۔‘ شہباز شریف اور حمزہ شہباز کے وکیل امجد پرویز عبوری ضمانت کی توثیق پر دلائل دیے۔

حمزہ شہباز کے وکیل امجد پرویز نے اپنے دلائل میں کہا کہ ڈیڑھ سال تک تحقیقات کی گئیں لیکن ایف آئی اے کویی شواہد رکارڈ پر نہ لا سکی۔ ’گذشتہ دور حکومت میں بدترین سیاسی انجینیئرنگ کی گئی۔ لاہور ہائی کورٹ بھی اسے سیاسی انجینیئرنگ قرار دے چکی ہے۔‘ انہوں ںے کہا کہ ’گذشتہ دور میں اپوزیشن لیڈرز کو دبانے کے لیے حکومتی مشینری کو استمعال کیا گیا۔‘

Advertisement

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here