قومی ہاکی ٹیم جنوبی افریقہ کے مارچ کے لیے امداد کی منتظر

ہاکی ٹیم کو جنوبی افریقہ کے مارچ کے لیے ایک بار پھر حکومت اور مخیر کی امداد کی ضرورت پڑ گئی ہے۔ ۔

پاکستان ہاکی ٹیم کو جنوبی افریقہ نیشن کپ کمپنی کے لیے 22 نومبر تک روانہ ہونا ضروری ہے لیکن پاکستان ہاکی فیڈریشن کے پاس پاسز اور اسپانسرز کی شھادت قلت۔

پی ایچ ایف کے پاس پاس کے کھلاڑی کے کھلاڑی جنوبی افریقہ کے قلت کے لیے امداد کے منتظر ہیں۔

پاکستان ہاکی ٹیم اگر نیشن کمپنی میں شرکت نہیں کرے گی تو اسے قبول کروں اور جرمانے سے ملاقات کرنا۔

ایونٹ میں عدم شرکت پر 15000 یورو جرمانہ اور پرو لیگ کمپنی پر پابندی لگانا۔

نیشن کپ میں عدم شرکت پر قومی ہاکی ٹیم پر اولپمکس میں کوالیفائی کرنے کے میدان میں بھی بند کھڑا ہے۔

پی ایچ ایف نے نیشن کپ کمپنی کے لیے پاکستان اسپورٹس بورڈ، وزارت بین الصوبائی رابطہ اور وزیر اعظم کو خط لکھیں۔ جس میں پی ایچ ایف نے 3 کروڑ روپے کی مدد مانگی ہے۔

ایف آئی ایچ نیشنز کپ جنوبی افریقہ میں 28 نومبر سے 4 دسمبر تک کھیلا جائے گا۔

واضح رہے کہ پاکستان ہاکی ٹیم نے اذلان شاہ کا کپڑا بھی پرائیوٹ سپانسر کی مدد سے کمپنی کی تھی۔ قومی ٹیم نے ایونٹ میں کانسی کا تمغہ حاصل کیا۔



گوگل ایپ اسٹور پر suchtv android ایپ انسٹال کریں۔

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button