PSX مسلسل رفتار کھو رہا ہے۔

PSX مسلسل رفتار کھو رہا ہے۔

کراچی: پاکستان ایکویٹی مارکیٹ نے جمعرات کو اپنی مندی کی رفتار کو جاری رکھا جہاں KSE-100 انڈیکس سیاسی غیر یقینی صورتحال کے علاوہ ڈیفالٹ کے بڑھتے ہوئے خطرے کے درمیان نیچے بند ہوا، تجزیہ کاروں نے کہا۔

پرل سیکیورٹیز کے ایک تجزیہ کار نے کہا کہ بینچ مارک KSE-100 انڈیکس میں معاشی اور سیاسی غیر یقینی صورتحال کی وجہ سے کمزور سرگرمی کی وجہ سے ایک مدھم سیشن دیکھنے میں آیا۔

"پاکستان کے یورو بانڈز پر ڈیفالٹ کا خطرہ جاری سیاسی عدم استحکام اور غیر واضح اقتصادی سمت کی وجہ سے ہے۔ اسٹیک ہولڈرز کے درمیان جاری اختلافات کو مدنظر رکھتے ہوئے نئے آرمی چیف کی تقرری مارکیٹ کو دبائو میں رکھنے کی اہم وجوہات میں شامل تھی۔

پاکستان اسٹاک ایکسچینج KSE-100 شیئرز انڈیکس 164.03 پوائنٹس یا 0.38 فیصد کمی کے ساتھ 42,819.72 پوائنٹس پر بند ہوا۔ KSE-30 شیئرز انڈیکس 53.48 پوائنٹس یا 0.34 فیصد گر کر 15,763.26 پوائنٹس پر بند ہوا۔

مجموعی طور پر 346 کمپنیوں کے حصص کا حصص رہا جن میں سے 103 کے بھاؤ میں اضافہ، 221 میں کمی اور 22 کے بھاؤ میں کوئی تبدیلی نہیں ہوئی۔

اجناس کے ماہر احسن مہانتی نے کہا کہ کمزور آمدنی کے آؤٹ لک پر اسٹاک تیزی سے نیچے بند ہوئے۔ "روپے کی عدم استحکام، ستمبر میں بڑے پیمانے پر مینوفیکچرنگ (LSMI) کی پیداوار کے مایوس کن اعداد و شمار، ڈالر کے بانڈ ڈیفالٹ رسک انڈیکس میں اضافہ اور عالمی اسٹاک اور خام تیل کی قیمتوں میں مندی نے مندی کے قریب میں ایک اتپریرک کردار ادا کیا۔”

آگے بڑھتے ہوئے، تجزیہ کاروں کو توقع ہے کہ مارکیٹ دباؤ میں رہے گی۔ لہذا، سرمایہ کاروں کو سفارش کی جاتی ہے کہ وہ آنے والے سیشنز میں "سیل آن سٹرینتھ” کی حکمت عملی اختیار کریں۔

گزشتہ تجارتی سیشن میں 186.70 ملین شیئرز کے کاروبار کے مقابلے میں تیار مارکیٹ کا حجم 181.22 ملین شیئرز رہا۔

جن کمپنیوں نے سب سے زیادہ اضافہ ظاہر کیا ان میں سفائر فائبر 80.31 روپے اضافے کے ساتھ 1,153.31 روپے فی حصص پر بند ہوا، اور سفائر ٹیکسٹائل روپے 76.85 اضافے کے ساتھ 1,102.18 روپے فی شیئر پر بند ہوا۔

سب سے زیادہ نقصان کی عکاسی کرنے والی کمپنیوں میں رفحان مکئی 350 روپے کمی کے ساتھ 9,650.01 روپے فی شیئر پر بند ہوئی اور نیسلے پاکستان 145 روپے کمی کے ساتھ 5,755 روپے فی شیئر پر بند ہوئی۔

بینک اسلامی پاکستان میں 17.13 ملین حصص کے کاروبار کے ساتھ سب سے زیادہ حجم دیکھنے میں آیا۔ اسکرپ 69 پیسے اضافے کے ساتھ 13.92 روپے فی حصص پر بند ہوا، اس کے بعد یونٹی فوڈز کا کاروبار 11.59 ملین شیئرز کے ساتھ ہوا۔ یہ 99 پیسے گر کر 17.37 روپے فی شیئر پر بند ہوا۔ ٹیلی کارڈ لمیٹڈ 11.54 ملین حصص کے کاروبار کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہا۔ یہ 12 پیسے اضافے کے ساتھ 10.19 روپے فی شیئر پر بند ہوا۔

یہ بھی پڑھیں

پی ایس ایکس نے ممکنہ آمد کے مقابلے میں 635 پوائنٹس کا اضافہ کیا۔
پی ایس ایکس نے ممکنہ آمد کے مقابلے میں 635 پوائنٹس کا اضافہ کیا۔

کراچی: پاکستان ایکویٹی مارکیٹ جمعرات کو تیزی کے ساتھ بند ہوئی۔

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button