ایف ایم بلاول نے استنبول دھماکے پر ترک ایف ایم سے تعزیت کی۔

وزارت خارجہ کی جانب سے جاری پریس ریلیز کے مطابق، وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے منگل کو استنبول میں ہونے والے بم حملے کے بعد ترک وزیر خارجہ Mevlüt Çavuşoğlu سے تعزیت کا اظہار کیا۔

ایک ٹیلی فونک گفتگو میں، بلاول نے "گھناؤنے حملے” کی شدید مذمت کی اور "دہشت گردی کی لعنت” کے خلاف جنگ میں ترکی کے ساتھ پاکستان کی مضبوط حمایت کا اعادہ کیا۔

انہوں نے ترک حکام کی جانب سے کی جانے والی کوششوں کو بھی سراہا جس کے نتیجے میں دہشت گردانہ حملے کے ذمہ داروں کی "فوری گرفتاری” ہوئی۔

ایف ایم بلاول نے کہا کہ "ترکی کی بہادر قوم اپنے پرعزم عزم اور خصوصیت کے ساتھ اس کے امن و استحکام کو نقصان پہنچانے کی تمام مذموم کوششوں کو ناکام بنا دے گی”۔

کال کے دوران، انہوں نے دھماکے میں زخمی ہونے والے ایک پاکستانی کو "بہترین طبی امداد” فراہم کرنے پر ترکی کا شکریہ بھی ادا کیا اور زیر علاج تمام افراد کی جلد صحت یابی کی خواہش کی۔

دھماکہ

اتوار کو استنبول کے بیوگلو ضلع میں پیدل چلنے والوں کی ایک مصروف سڑک پر ہونے والے دھماکے میں کم از کم چھ افراد ہلاک اور 81 زخمی ہو گئے۔

منگل کو سرکاری انادولو ایجنسی نے وزیر انصاف بیکر بوزدگ کے حوالے سے بتایا کہ پولیس نے دھماکے کی تحقیقات کے حصے کے طور پر 50 افراد کو حراست میں لیا ہے۔

ترک حکومت نے کردستان ورکرز پارٹی (PKK) اور شامی کردش (YPG)، PKK کی ایک شاخ، عسکریت پسندوں کو اس حملے کا ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔

مشتبہ بمبار، احلام البشیر نامی شامی خاتون کو پیر کی صبح استنبول میں ایک گھر پر چھاپے کے دوران حراست میں لیا گیا۔

استنبول پولیس کی ٹیموں نے خاتون مشتبہ شخص کی شناخت اس کی جسمانی شکل کی بنیاد پر کی، جس کا تعین دھماکے کی جگہ کے قریب سیکیورٹی کیمروں پر کی گئی تصاویر کے ذریعے کیا گیا ہے۔

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button