پی ٹی آئی حقیقی آزادی کے لئے پنجاب ضمنی انتخابات لڑ رہی ہے: عمران خان

لاہور: اے آر وائی نیوز نے جمعہ کو خبر دی کہ سابق وزیر اعظم اور پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان نے زور دے کر کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف ‘حقیقی آزادی’ کے لیے پنجاب ضمنی انتخابات میں حصہ لے رہی ہے۔

سابق وزیر اعظم نے پنجاب ضمنی انتخابات کے سلسلے میں لاہور میں ایک عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے عوام پر پاکستان کے میر جعفر اور میر صادق کی مدد سے امریکی غلام مسلط کیے گئے تھے۔

عمران خان نے نوٹ کیا کہ تمام سروے سے ظاہر ہوا ہے کہ پی ٹی آئی ضمنی انتخابات میں اپنے مخالفین کے خلاف قیادت کر رہی تھی جبکہ لاہور کے عوام کو سراہتے ہوئے کہا کہ انہوں نے ‘خوف’ کی زنجیریں توڑ دی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عالمی سطح پر خام تیل کی قیمتیں پی ٹی آئی کے اقتدار میں آنے کے مقابلے میں کم تھیں اور اس کے باوجود حکومت نے قیمتوں میں مزید کمی نہیں کی۔

سابق وزیر اعظم نے ‘ٹرن کوٹ’ کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ پارٹی کارکن ‘لوٹوں’ کو شکست دینے کے لئے تیار ہیں کیونکہ وہ اپنا ضمیر فروخت کرکے عوام کے مینڈیٹ کو ذلیل کرتے ہیں۔

عمران خان نے ‘بدعنوانی’ کے حوالے سے پیپلز لیگ کی قیادت کو تنقید کا نشانہ بنانے والے کہا کہ ہم ایسے افراد کو کیوں منتخب کریں جو لوگوں کا پیسہ لوٹتے ہیں اور ان کی قسمت بیرون ملک منتقل کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں نے دو خاندانوں شریف اور زرداری کے خلاف جہاد کا اعلان کیا ہے اور ہمیں انہیں شکست دینی ہے۔

عمران خان نے کہا کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) نے عدالت میں قبول کیا کہ اس نے غلطی سے 40 لاکھ افراد کو مردہ قرار دے دیا، اس کے بعد چیف الیکشن کمشنر (سی ای سی) کو عہدہ چھوڑ دینا چاہیے۔ انہوں نے الزام لگایا کہ مسٹر ایکس نے انتخابات میں دھاندلی کے لئے ہر حلقے میں 15 سے 20 ہزار بوگس ووٹ تیار کیے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ امریکہ نے موجودہ حکمرانوں کو پاکستان پر "مسلط” کیا کیونکہ وہ اقتدار میں "ہاں آدمی” چاہتا ہے۔ "کیا آپ سمجھتے ہیں کہ امریکہ ترقی پسند پاکستان دیکھنا چاہتا ہے؟ یقینا نہیں،” عمران نے مزید کہا۔

وزیراعلیٰ انتخابات میں پی ٹی آئی کے ایم پی اے کی جانب سے ہمزہ شہباز کو ووٹ دینے کے بعد خالی ہونے والی پنجاب اسمبلی کی 20 نشستوں پر ضمنی انتخابات 17 جولائی 2022 کو ہوں گے۔

جولائی 2022 میں پنجاب اسمبلی میں سپریم کورٹ آف پاکستان کے حکم پر ہونے والے ضمنی انتخابات کے نتائج وزیراعلیٰ کے ووٹوں کی گنتی کے لیے ضروری ہوں گے۔

مسلم لیگ (ن) کو ملک کے سب سے بڑے صوبے میں اپنا وزیر اعلیٰ منتخب کرنے کے لئے اکثریت حاصل کرنے کے لئے ضمنی انتخابات میں کل 9 نشستیں حاصل کرنے کی ضرورت ہے۔

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button