کرک میں بارش، سیلاب سے 10 افراد ہلاک: پی ڈی ایم اے

کرک: پاکستان ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (پی ڈی ایم اے) کی رپورٹ کے مطابق خیبر پختونخوا (کے پی کے) کی تحصیل کرک اور تخت نصرتی میں حالیہ بارشوں اور سیلاب سے کم از کم 10 افراد جان کی بازی ہار گئے۔

پی ڈی ایم اے کے مطابق علاقے میں حالیہ بارشوں اور سیلاب کی وجہ سے کرک سے 4 اور تخت نصرتی کے 6 افراد سمیت کم از کم 10 افراد جان کی ہاتھ دھو بیٹھے۔ پی ڈی ایم اے نے بتایا کہ ہلاک ہونے والوں میں ایک خاتون اور 5 بچے شامل ہیں۔

اتھارٹی نے مقتولین کے اہل خانہ کو تین لاکھ روپے کی رقم ادا کرنے کا اعلان کیا۔ پی ڈی ایم اے نے بتایا کہ مزید برآں سیلاب سے متاثرہ علاقوں اور متاثرہ افراد کے لیے 20 ملین روپے کی رقم جاری کی گئی ہے۔

اس میں مزید کہا گیا ہے کہ اتھارٹی نے متاثرہ افراد کے لئے خوراک کی فراہمی اور خیموں کا بھی اہتمام کیا ہے۔

وزیر اعلی کے پی کے محمود خان آج سیلاب سے متاثرہ علاقوں کا دورہ کریں گے اور مرنے والوں کے اہل خانہ میں چیک تقسیم کریں گے۔

پی ڈی ایم اے خیبر پختونخوا نے 3 جون 2022 کو صوبے بھر میں موسلا دھار بارش اور شہری سیلاب کی وارننگ جاری کی تھی۔

پاکستان کے محکمہ موسمیات (پی ایم ڈی) نے ڈیرہ اسماعیل (ڈی آئی) خان، دیر، سوات، مالاکنڈ اور تور گھر میں موسلا دھار بارش کی پیش گوئی کی تھی۔

اسی طرح کوہستان، شانگلہ، بٹگرام، بونیر، مانسہرہ، مہمند، کرم، نوشہرہ، ایبٹ آباد اور پشاور میں بھی موسلا دھار بارش کی پیش گوئی کی گئی تھی۔

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button