احتساب عدالت نے ڈار کی درخواست پر نیب کو نوٹس جاری کر دیا۔

وفاقی وزیر اسحاق ڈار (ر) صحافیوں سے گفتگو کر رہے ہیں۔  تصویر: جیو نیوز/اسکرین گریب
وفاقی وزیر اسحاق ڈار (ر) صحافیوں سے گفتگو کر رہے ہیں۔ تصویر: جیو نیوز/اسکرین گریب

اسلام آباد: اسلام آباد کی احتساب عدالت نے بدھ کے روز قومی احتساب بیورو (نیب) کو وفاقی وزیر اسحاق ڈار کی جانب سے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں وارنٹ منسوخ کرنے کی درخواست پر نوٹس جاری کردیا۔

23 ستمبر کو احتساب عدالت نے سبکدوش ہونے والے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کی جگہ لینے والے ڈار کے وارنٹ گرفتاری 7 اکتوبر تک معطل کر دیے، جس سے ان کی لندن سے واپسی اور عدالت کے سامنے ہتھیار ڈالنے کی راہ ہموار ہو گئی۔

پیر کو، ڈار وزیر اعظم کے ہمراہ وفاقی وزیر خزانہ کا عہدہ سنبھالنے کے لیے پانچ سالہ خود ساختہ جلاوطنی کے بعد پاکستان پہنچے۔

11 دسمبر 2017 کو احتساب عدالت نے نیب ریفرنس میں اسحاق ڈار کی مسلسل غیر حاضری کے باعث انہیں اشتہاری قرار دیا تھا۔ نیب نے ڈار پر اپنے معلوم ذرائع آمدن سے غیر متناسب اثاثے رکھنے کا الزام لگایا۔

نیب نے یہ مقدمہ سپریم کورٹ کے 28 جولائی کے پاناما پیپرز کیس کے فیصلے کی روشنی میں دائر کیا تھا۔

آج کی سماعت

سماعت کے دوران سینیٹر اسحاق ڈار نے خود کو احتساب عدالت کے سامنے پیش کیا اور اپنے وارنٹ گرفتاری منسوخ کرنے کی استدعا کی۔

دریں اثناء احتساب عدالت نے ان کی درخواست پر نیب کو نوٹس جاری کرتے ہوئے ڈار کو 7 اکتوبر کو عدالت میں پیش ہونے کا حکم دیا۔

"ہم اثاثوں کے ریفرنس کے ساتھ وارنٹ کی منسوخی کی درخواست کی سماعت کریں گے،” جج نے ریمارکس دیئے اور سماعت 7 اکتوبر (جمعہ) تک ملتوی کردی۔


پیروی کرنے کے لیے مزید….

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button