وفاقی کابینہ نے ربیع سیزن کے لیے 3 لاکھ میٹرک ٹن یوریا درآمد کرنے کی منظوری دے دی

بدھ کو اسلام آباد میں وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں وزارت صنعتی پیداوار کی سفارشات پر یہ منظوری دی گئی۔ ٹریڈنگ کارپوریشن آف پاکستان کو حکومت سے گورنمنٹ موڈ کے تحت اجناس درآمد کرنے کا کام سونپا گیا ہے۔

کابینہ نے لیونگ انڈس انیشی ایٹو کے تحت تمام متعلقہ وفاقی وزارتوں، صوبائی حکومتوں بشمول گلگت بلتستان اور آزاد کشمیر پر مشتمل اسٹیئرنگ کمیٹی کی تشکیل کی بھی منظوری دی۔

اس نے بنیادی سطح پر بیداری پیدا کرنے کے لیے اسکولوں اور کالجوں کے نصاب میں پہل کو شامل کرنے پر زور دیا۔ لیونگ انڈس انیشی ایٹو کے تحت، مجوزہ اقدامات بنیادی ڈھانچے کی تعمیر کو یقینی بنائیں گے اور مستقبل میں قدرتی وسائل کے تحفظ اور دریائے سندھ اور اس کے معاون دریاؤں سے منسلک اقتصادی سرگرمیوں کو موسمیاتی تبدیلیوں سے محفوظ بنائیں گے۔

اس موقع پر وزیر اعظم شہباز شریف نے سیلاب سے متاثرہ بیس لاکھ خاندانوں میں پچاس ارب روپے تقسیم کرنے پر بی آئی ایس پی کی تعریف کی۔

انہوں نے سندھ حکومت اور دیگر متعلقہ اداروں کو بھی ہدایت کی کہ وہ ایک جامع حکمت عملی تیار کریں اور صوبے کے سیلاب زدہ اضلاع کو سیراب کرنے کے لیے عملی اقدامات کریں۔

اس حوالے سے کابینہ کو فرانس کی جانب سے اضافی واٹر پمپس کی فراہمی سے متعلق آگاہ کیا گیا۔ اس پر وزیراعظم اور کابینہ نے فرانس کے عوام اور حکومت کے ساتھ ساتھ پاکستان میں فرانسیسی سفیر کا شکریہ ادا کیا۔

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button