پاکستان کو لچک، تعمیر نو کے موافقت اور فنڈز کی ضرورت ہے: وفاقی وزیر

وفاقی وزیر برائے موسمیاتی تبدیلی سینیٹر شیری رحمان نے کہا ہے کہ سندھ کے بڑے حصے اب بھی سیلابی پانی میں ڈوبے ہوئے ہیں اور لوگوں کی زندگیاں بچانے اور انہیں پناہ دینے کے لیے فنڈز اور وسائل کی ضرورت ہے۔

رحمان نے کہا کہ سندھ کے بڑے حصوں میں سیلابی پانی اب بھی کھڑا ہے، جہاں زمین کے بہت سے حصے سطح سمندر سے نیچے ہیں، جب کہ جانیں بچانے اور پناہ گاہ فراہم کرنے کے لیے فنڈز اور وسائل کی کمی ہے۔ تمام دستیاب وسائل کو نگل رہے ہیں۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ ترقیاتی شراکت داروں کے ساتھ ساتھ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے قدم رکھنے کے باوجود، جنہوں نے پاکستان کی مدد کے لیے پرجوش اپیل کی ہے، موجودہ اور آنے والی ضروریات کے درمیان بہت بڑا فرق ہے۔

"بس پورے چھوٹے سمندروں کو باہر نکالنے کے لیے پانی کی بہت بڑی ضرورت اس پیمانے پر پوری نہیں کی جا سکتی، کم از کم موجودہ واٹر انجینئرنگ کے دستیاب وسائل کے ساتھ۔ سینیٹر نے کہا کہ اس قدر پانی کے آسمان سے گرنے کی کبھی کسی نے توقع یا منصوبہ بندی نہیں کی تھی اور نہ ہی ہم نے پاکستان کے کسی حصے میں اس قدر سیلاب دیکھا ہے۔

رحمان نے کہا کہ فنڈز اور سامان کا واضح خسارہ ہے جس کی وجہ سے ہر امدادی سرگرمیاں متاثر ہو رہی ہیں۔ "ہم نے پہلے ہی تمام ترقیاتی اور موسمیاتی لچکدار فنڈز کو ریلیف کے لیے دوبارہ استعمال کیا ہے، خاص طور پر بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کو فرنٹ لوڈ کرنے کے لیے تاکہ اس بات کو یقینی بنایا جا سکے کہ متاثرہ خاندانوں کو فوری طور پر 25,000 روپے کی قسطیں فراہم کی جائیں۔”

انہوں نے کہا، "اقوام متحدہ کے نظام کے علاوہ، آفت کے پیمانے اور فوری طور پر، ہمیں فوری طور پر امداد کے لیے عالمی برادری سے مزید امداد کی ضرورت ہے، کیونکہ ہزاروں اب بھی خیموں میں ہیں، جب کہ بہت سے لوگ اب بھی اپنے سروں کو ڈھانپنے کی تلاش میں ہیں۔” مزید کہا کہ ہزاروں لوگ اب بھی پناہ کی تلاش میں ہیں، اور ہمیں اس بات کی فکر ہے کہ لوگ پوری سردیوں کو اس طرح گزاریں۔

سینیٹر نے مزید کہا کہ پاکستان کو 33 ملین متاثرہ افراد کی خدمت کے لیے مزید بہت کچھ درکار ہوگا۔ پاکستان کے معاشی نظام کو بہت بڑا جھٹکا لگا ہے۔ ہمیں قرض کے بوجھ سے فوری بفرز کی ضرورت ہے جو تقریباً آدھے ملک کی تعمیر نو کے لیے مالیاتی اختیارات کو نچوڑ رہا ہے، جبکہ ہمیں موسمیاتی لچک کے فنڈز کی بھی ضرورت ہے جن تک رفتار اور پیمانے کے ساتھ رسائی حاصل کی جا سکے۔

اردو پوائنٹ 2

اردو پوائنٹ 2 پاکستان کو بہترین نیوز پبلیشر سنٹر یے۔ یہاں آپ پاکستانی خبریں، انٹرنیشنل خبریں، ٹیکنالوجی، شوبز، اسلام، سیاست، اور بھی بہیت کہچھ پڑھ سکتے ہیں۔

مزیز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button